محفوظات برائے February 2018 ء
رنگین انقلابات حصہ آخر
Editor نے Monday، 19 February 2018 کو شائع کیا.

رنگین انقلابات حصہ آخر مسعود انور hellomasood@gmail.com www.masoodanwar.com رنگین انقلاب کے طریقہ کار کو سمجھنے کے لئے وینزویلا ایک بہترین مثال ہے۔ یہ CR 42003 کی بات ہے کہ ان سازش کاروں نے وینز ویلا میں حکومت کی تبدیلی کے لئے رنگین انقلاب لانے کا فیصلہ کیا ۔ اس سے ایک سال قبل یہ ہیوگو […]

مکمل تحریر پڑھیے »


رنگین انقلابات حصہ سوم
Editor نے Friday، 16 February 2018 کو شائع کیا.

رنگین انقلابات حصہ سوم مسعود انور hellomasood@gmail.com www.masoodanwar.com قارئین اکرام کے اصرار پررنگین انقلابات حصہ دوم دوبارہ شائع کیا گیا ہے شارپ اور گال کے طریقہ کار کے تحت انقلاب لانے کی ترکیب ہر ملک میں ایک ہی رہیCR 3 ہے۔طلبہ اور نوجوانوں کی تحریک تشکیل دی جائے جس کا لیڈر بالکل ایک نیا چہرہ […]

مکمل تحریر پڑھیے »


رنگین انقلابات حصہ دوم
Editor نے Thursday، 15 February 2018 کو شائع کیا.

مسعود انور hellomasood@gmail.com www.masoodanwar.com قارئین اکرام کے اصرار پر رنگین رنگین انقلابات حصہ دوم دوبارہ شائع کیا گیا ہے یہ 1985 کی بات ہے کہ ناٹو کے زیراہتمام ایک سماجی سائنسداں جین شارپ کا ایک مقالہCR 2 چھاپا گیا جس کا عنوان تھا یورپ کو ناقابل تسخیر بنانا ۔اس مقالے میں شارپ نے دنیا میں […]

مکمل تحریر پڑھیے »


رنگین انقلابات حصہ اول
Editor نے Wednesday، 14 February 2018 کو شائع کیا.

مسعود انور hellomasood@gmail.com www.masoodanwar.com نوٹ ( اب سے گذشتہ ایک برس قبل اگست میں ہی ، میں نے رنگین انقلابات کے نام سے CR 1چار کالموں کی ایک سیریز لکھی تھی جس میں تفصیل سے دنیا بھر میں حکومتوں کی تبدیلی کے لئے لائے گئے رنگین انقلابات اور ان کی پس پشت قوتوں کے بارے […]

مکمل تحریر پڑھیے »


آخر پولیو ہی کیوں ؟ خسرہ یا ملیریا کیوں نہیں؟
Editor نے Tuesday، 13 February 2018 کو شائع کیا.

مسعود انور hellomasood@gmail.com www.masoodanwar.com polioانسداد پولیو کی ٹیموں پر قاتلانہ حملوں کے بعد حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ اس کی اب تشہیر نہیں کی جائے گی اور خاموشی سے اہداف حاصل کرنے کی کوشش کی جائے گی۔ دوسری جانب سندھ حکومت نے انسداد پولیو کی ٹیم کے رضاکاروں کا یومیہ وظیفہ ڈھائی سو روپے […]

مکمل تحریر پڑھیے »


پاکستان اور انسداد پولیو مہم
Editor نے Monday، 12 February 2018 کو شائع کیا.

مسعود انور hellomasood@gmail.com www.masoodanwar.com polioرضاکاروں پر قاتلانہ حملوں کے بعد پاکستان میں انسداد پولیو مہم ایک نیا رخ اختیار کرچکی ہے۔ جس طرح ملالہ یوسف زئی پر حملے کی کوئی بھی ذی ہوش شخص حمایت نہیں کرسکتا مگر دوسری جانب کوئی بھی ذی علم اور پاکستان سے محبت رکھنے والا کوئی بھی شخص ملالہ کے […]

مکمل تحریر پڑھیے »