محفوظات برائے ”بلاگ“ زمرہ

بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ چہارم و آخر  مسعود انور www.masoodanwar.com hellomasood@gmail.com  ہیکل ثالث یا Third Temple عالمگیر شیطانی حکومت کے قیام میں بنیادی اہمیت کا حامل ہے ۔ اس کی اہمیت کا اندازہ اس سے لگایا جاسکتا ہے کہ فری میسن کی ممبر شپ کے مدارج میں جو تمثیل ہوتی ہے وہ ہیکل […]

مکمل تحریر پڑھیے »


بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ سوم
Editor نے Saturday، 16 December 2017 کو شائع کیا.

بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ سوم مسعود انور www.masoodanwar.com hellomasood@gmail.com یہودیوں کے First Temple کی تباہی کے بعد Second Temple بھی تباہ ہوچکا ہے ۔ صہیونیوں کا کہنا ہے کہ جب تک وہ ہیکل سلیمانی کو اس کی اصل جگہ پر بحال نہیں کردیتے ، اس وقت تک پوری دنیا پر ان […]

مکمل تحریر پڑھیے »


بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ دوم
Editor نے Thursday، 14 December 2017 کو شائع کیا.

بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ دوم مسعود انور www.masoodanwar.com hellomasood@gmail.com ہیکل سلیمانی کو یہودی First Temple بھی کہتے ہیں ۔ ہیکلِ سلیمانی کی تباہی کے بعد اگلے 70 برس تک ہیکلِ سلیمانی کا صفحہ ہستی پر کوئی وجود نہ تھا۔بنی اسرائیل کی توبہ اور اصلاح حال کے نتیجے میں اللہ تعالیٰ نے […]

مکمل تحریر پڑھیے »


بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ اول
Editor نے Wednesday، 13 December 2017 کو شائع کیا.

بیت المقدس ہی اسرائیل کا دارالحکومت کیوں؟ حصہ اول مسعود انور www.masoodanwar.com hellomasood@gmail.com  امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے اور یہاں پر امریکی سفارتخانے کی منتقلی کے احکامات کے بعد سے مسلم دنیا میں ایک نیا اضطراب پیدا ہوگیا ہے ۔ مسلم عوام میں موجود بے چینی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


Project for a new Middle East 2
Editor نے Saturday، 11 July 2015 کو شائع کیا.

نئے مشرق وسطیٰ کا پروجیکٹ حصہ دوم مسعود انور www.masoodanwar.com masoodsahab@yahoo.com یہ تو ہم دیکھ ہی چکے ہیں کہ روس اور سعودی عرب کے نئے ہنی مون کا تعلق کہیں سے بھی معاشی نہیں ہے۔ اس کا تعلق سعودی عرب میں ایٹمی بجلی گھر سے بھی نہیں ہے کہ سعودی عرب اس سے قبل اسی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


اردو بلاگ
Editor نے Thursday، 9 July 2015 کو شائع کیا.

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-